وزیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ۔

وزیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ نے آج ای سی سی اجلاس طلب کرلیا.

اسلام آباد: وزیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ نے دو نکاتی ایجنڈے پر تبادلہ خیال کے لئے اقتصادی رابطہ کمیٹی ( ای سی سی ) کا اجلاس طلب کرلیا ۔ توقع کی جا رہی ہے کہ کمیٹی پاکستان اسٹیل ملز ( پی ایس ایم ) کے خلاف جرمنی کی کمپنی کے واجبات کی ادائیگی کی منظوری دے گی ۔ مزید یہ کہ امکان ہے کہ کمیٹی احسان پروگرام میں مواصلاتی تعاون کی فراہمی کو منظور کرے گی ۔ مزید پڑھیں :  توکلنا ایپ: ابشر اکاؤنٹ نہ ہونے کی صورت میں بھی رجیسٹر کیا جاسکتا ہے ۔

گذشتہ اجلاس میں ، وزیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ کی سربراہی میں ای سی سی نے آزاد بجلی پروڈیوسروں ( آئی پی پی ) کے ساتھ معاہدوں کو منظوری دے دی تھی ۔ ای سی سی اجلاس کے دوران 46 آئی پی پیز کے ساتھ معاہدوں کی منظوری اور 30 ​​نومبر 2020 تک اپنے واجبات کی ادائیگی کا اصولی فیصلہ کیا گیا تھا ۔ وفاقی کابینہ سے حتمی منظوری ملنے کے بعد حکومت آئی  پی پیز کے ساتھ معاہدوں سے 836 ارب روپے کی بچت کرسکے گی۔ مزید پڑھیں : کراچی کے بلدیہ میں تھریڈ فیکٹری میں آگ لگنے سے تین افراد ہلاک ۔

02 فروری کو ، پاکستان تحریک انصاف ( پی ٹی آئی ) کی موجودہ حکومت ایک اور سنگ میل پر پہنچی ، جب ملک میں سستی بجلی کے لئے چھ مزید آزاد بجلی پروڈیوسروں ( آئی پی پی ) سے بات چیت کامیاب رہی ۔ اس کے علاوہ ، ای سی سی کے اجلاس میں فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کو 350 ملین روپے کی ضمنی گرانٹ کی بھی منظوری دی گئی ہے ، جو شوگر ملوں میں کیمرے رکھنے کے لئے ان کی سرگرمیوں کی نگرانی کے لئے استعمال ہوگی ۔ مزید پڑھیں :حکومت نے آج سے 7 ملین مستحق خاندانوں میں نقد رقم تقسیم کرنا شروع کردی: وزیر اعظم ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں